یونیسیف کی سیلاب متاثرہ علاقوں میں تعلیم کے لیے تعاون کی یقین دہانی –

Read Time:1 Minute, 39 Second


کراچی: یونیسیف نے محکمہ تعلیم سندھ کو سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں تعلیم کے لیے تعاون کی یقین دہانی کرا دی۔

تفصیلات کے مطابق یونیسیف کی چیف ایجوکیشن ایلن وان نے جمعرات کو عمرکوٹ میں وزیر تعلیم سندھ سید سردار علی شاہ سے ملاقات کی۔

صوبائی وزیر تعلیم نے ایلن وون کو بتایا کہ بارش اور سیلاب سے ابتدائی سروے کے مطابق سندھ میں 22 ہزار سے زائد اسکولوں کی عمارتیں مکمل یا جزوی طور پر تباہ ہوئی ہیں، اور 28 لاکھ بچوں کی تعلیم متاثر ہوئی۔

انھوں نے کہا کرونا وبا کہ وجہ سے ایک سال سے زائد عرصہ اسکول بند رہے اور بچوں کی تعلیم پہلے ہی کافی متاثر ہوئی ہے۔

وزیر تعلیم نے یونیسیف کے ایجوکیشن چیف کو ٹینٹ سٹیز میں متاثرہ بچوں کے لیے قائم عارضی تعلیمی مراکز (TLC) سے متعلق بھی بریفنگ دی۔ انھوں نے کہا اس طرح کا منصوبہ انھوں نے بحیثیت وزیر تعلیم اپنے آبائی ضلع عمرکوٹ سے شروع کیا تھا۔

یونیسیف کے سربراہ نے وزیر تعلیم سندھ کی قیادت میں محکمہ تعلیم کے بروقت رد عمل کو سراہا، ایل وون نے کہا موجودہ حالات میں ٹی ایل سی کا اقدام تعلیمی نقصانات کی تلافی اور ایسی ہنگامی صورت حال میں تعلیم کے تسلسل کو بحال رکھنے کے لیے ایک عملی متبادل ہے۔

انھوں نے کہا اس ماڈل کو دیگر صوبوں کے سیلاب متاثرہ بچوں کے لیے بھی شروع کیا جائے گا۔

Comments





Source link

Happy
Happy
0 %
Sad
Sad
0 %
Excited
Excited
0 %
Sleepy
Sleepy
0 %
Angry
Angry
0 %
Surprise
Surprise
0 %

Average Rating

5 Star
0%
4 Star
0%
3 Star
0%
2 Star
0%
1 Star
0%

Leave a Reply

Your email address will not be published.